بھارتی فوج کی ریاستی دہشتگردی،مزید 2 کشمیری نوجوان شہید

سری نگر: مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج کی ریاستی دہشت گردی جاری ہے، غاصب بھارتی فوج نے ترال میں مزید دو کشمیری نوجوانوں کو شہید کر دیا۔

کشمیر میڈیا سروس کے مطابق قابض بھارتی فوج کی جانب سے ضلع ترال کے علاقے پنگلش میں نام نہاد تلاشی و محاصرہ آپریشن کے دوران مزید دو نوجوانوں کو شہید کر دیا گیا۔

کشمیری نوجوانوں کی شہادت کے خلاف اہل علاقہ نے شدید احتجاج کیا، اور بھارتی حکومت، فوج کے خلاف شدید نعرے بازی کی۔

دوسری جانب ضلع شوپیاں میں قابض بھارتی فوج کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کیا گیا، مظاہرین کا کہنا تھا کہ بھارتی فوج بلا وجہ اہل علاقہ کو ہراساں کر رہی ہے۔

بھارت کی نیشنل انوسٹی گیشن ایجنسی کی جانب سے کشمیری حریت رہنما میرواعظ عمر فاروق کو طلب کرنے پر سری نگر پھر میں مکمل شٹر ڈاؤن ہڑتال رہی، احتجاج اور ہڑتال کی کال تاجر تنظیموں کی جانب سے دی گئی۔ جس کے باعث سری نگر شہر کی تمام چھوٹی بڑی مارکٹیں اور دکانیں مکمل بند رہیں۔

Comments are closed.