جعلی اکاؤنٹس کیس میں کے ڈی اے افسر نجم زمان اور حسن میمن گرفتار

کراچی: قومی احتساب بیورو نے جعلی اکاؤنٹس کے ذریعے منی لانڈرنگ کیس کی تحقیقات مزید تیز کر دی ہیں۔ کراچی ڈویلپمنٹ اتھارٹی کے سیکرٹری نجم زمان اور پراجیکٹ ڈائریکٹر حسن میمن کو گرفتاری سے گرفتار کر کے راہداری ریمانڈ حاصل کر لیا گیا۔

سابق صدر آصف زرداری کی نیب میں پیشی سے قبل مزید گرفتاریاں کی جا رہی ہیں، سیکرٹری کے ڈی اے نجم زمان اور پراجیکٹ ڈائریکٹر حسن میمن کراچی سے گرفتار کر لیا گیا ہے۔ ذرائع کے مطابق ملزمان پر کلفٹن میں مندر اور لائبریری کے پلاٹس آصف زرداری کے فرنٹ مین کو دینے کا الزام ہے جب کہ حسن میمن پر کمیشن کا پیسہ جعلی اکاونٹس میں جمع کرنے کا الزام ہے۔

نیب نے کراچی سے دونوں ملزمان کا راہداری ریمانڈ حاصل کرلیا ہے، اور کل انہیں اسلام آباد منتقل کر دیا جائے گا۔ گرفتار ملزمان کے پاس جعلی اکاونٹس کیس کی اہم معلومات ہیں۔

قبل ازیں دوسری جانب پیپلز پارٹی کے شریک چیئرمین آصف زرداری اور ان کی ہمشیرہ فریال تالپور نے میگا منی لانڈرنگ کیس کی اسلام آباد منتقلی سے متعلق بینکنگ کورٹ کا فیصلہ سندھ ہائی کورٹ میں چیلنج کردیا۔

درخواست میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ بینکنگ کورٹ کی جانب سے میگا منی لانڈرنگ کیس کو کراچی سے اسلام آباد منتقل کرنے کے احکامات جاری کئے گئے ہیں جو کہ غیر قانونی ہیں۔ اس لئے اس فیصلے کو کالعدم قرار دے۔

Comments are closed.