ایف اے ٹی ایف کا پاکستان سے ڈومورکا مطالبہ،40 اہداف دے دیئے

اسلام آباد: فنانشل ایکشن ٹاسک فورس کی جانب  سے ایک بار پھر ڈومور کا مطالبہ کیا گیا ہے، پاکستان کو چالیس نئے اہداف دے دیئے گئے۔عالمی ادارے نےکہاہے کہ سونے کی نقدی کی شکل میں خرید و فروخت کو روکا جائے۔

 کالعدم اوردہشت گرد تنظیموں کی مالی معاونت روکنے کے لئے عالمی ادارے کی جانب سے حکومت پاکستان کو 40 نئے اہداف دیئے گیے ہیں، جن میں طلائی زیورات اورسونے کی نقد خریدو فروخت کو دستاویزی شکل دینے  بالخصوص طلائی زیور عطیہ کیے جانے پر پابندی کا مطالبہ کیا گیا ہے۔

فنانشل ایکشن ٹاسک فورس کے ایشیا پیسفک گروپ نے پاکستان کو تمام صرافہ بازاروں کیلئے نگران ادارے کے قیام کا ہدف سونپا ہے،،جب کہ سونے کے لین دین کےلیے نقدی کے بجائے بینک کارڈز استعمال اور خریداروں کا ڈیٹا اکھٹا کرنے پر زوردیا گیا ہے۔ عالمی ادارے نے کالعدم تنظیموں کوسونے اورزیورات کی شکل میں عطیات فراہمی روکنے کا بھی مطالبہ کیا ہے۔

ذرائع کے مطابق حکومت پاکستان کو ضلعی سطح پر رجسٹرڈ غیرسرکاری تنظیموں کا ڈیٹا اکٹھا کرنے اور لاکھوں این جی اوز کیلئے اصلاحاتی نظام قائم کرنے کا کہا گیا ہے۔ تا کہ نچلی سطح پر کام کرنے والی بھی غیرسرکاری تنظیموں کے اکاؤنٹس کی تفصیلات اکٹھی کی جا سکیں۔

Comments are closed.