ماہرہ خان بچوں کیساتھ زیادتی کا ذمہ دارفنکاروں کو قرار دینے پر آگ بگولہ

کراچی: پاکستان کی نامور اداکارہ ماہرہ خان نے بچوں کے ساتھ جنسی زیادتی جیسے واقعات کا الزام شوبز فنکاروں پر لگانے والوں کو کھری کھری سنا دیں، ان کا کہنا ہے کہ معاشرے میں موجود دقیانوسی سوچ رکھنے والوں کو ایسے بیانات پر شرمندہ ہونا چاہیے۔

خیبرپختونخواہ سے تعلق رکھنے والی 10 سالہ معصوم فرشتہ کے ساتھ زیادتی اوربہیمانہ تشدد کے بعد قتل کے واقعے پرعام لوگوں کے ساتھ شوبزفنکاربھی پرسراپا احتجاج ہیں اوردرندہ صفت مجرم کوسخت سے سخت سزا دینے کا مطالبہ کررہے ہیں۔ تاہم معاشرے میں موجود چند افراد نے معصوم بچوں کے ساتھ زیادتی کا ذمہ دار اُلٹا فنکاروں کو قراردے دیا۔

زروان علی نامی صارف نے ننھی فرشتہ کے ساتھ ہوئے ظلم کا ذمہ دار فنکاروں کو قرار دیتے ہوئے لکھا شوبز سے وابستہ افراد زیادتی کے کیسزکی آڑ میں اپنا ایجنڈا پھیلانا بند کریں۔ بچوں کے ساتھ زیادتی کے بڑھتے واقعات کی ایک وجہ شوبز فنکاروں کی جانب سے پھیلائی جانے والی فحاشی ہے۔

ماہرہ خان نے اس صارف کی سوچ پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا، سچ میں؟ فحاشی کی وجہ سے کوئی شخص ایک 10 سالہ بچی کے ساتھ زیادتی کرتا ہے اورپھر اسے قتل کردیتا ہے، ہمارے معاشرے میں چند لوگوں کی ذہنیت اس طرح کی ہے جو ایسی سوچ رکھتی ہے، یہ بہت شرم کی بات ہے اور ہاں میں پیچھے نہیں ہٹوں گی، میری آوازمیری مرضی، میں وہی کروں گی جو میرا دل چاہے گا۔

Comments are closed.