دنیا میں ہر منٹ میں تین افراد شوگرکے باعث معذور ہوجاتے ہیں، ماہرین

کراچی: ماہرین امراض ذیابطیس کا کہنا ہے کہ ہرمنٹ میں دنیا بھر میں تین افراد زیابطیس کی پیچیدگیوں کے نتیجے میں معذور ہوجاتے ہیں، پاکستان میں سالانہ تین سے چار لاکھ افراد شوگر کی بیماری کے نتیجے میں ہونے والے زخموں کی وجہ سے اپنے پیروں یا ٹانگوں سے محروم ہوجاتے ہیں۔

کراچی میں دوروزہ عالمی ذیابطیس کانفرنس شروع ہوگی، ماہرین کا کہنا ہے کہ ملکی و غیر ملکی ماہر امراض ذیابطیس کا کہنا ہے کہ ہر منٹ میں دنیا بھر میں تین افراد زیابطیس کی پیچیدگیوں کے نتیجے میں معذور ہوجاتے ہیں، پاکستان میں سالانہ تین سے چار لاکھ افراد شوگر کی بیماری کے نتیجے میں ہونے والے زخموں کی وجہ سے اپنے پیروں یا ٹانگوں سے محروم ہوجاتے ہیں۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ پورے ملک میں ایسے تین ہزار کلینک قائم کئے جائیں جہاں ماہر ڈاکٹر اور پیرا میڈیکل اسٹاف شوگر کے مریضوں کا علاج کر کے ان کے پیروں اور ٹانگیں کٹنے سے بچا سکیں۔

ماہرین کا کہنا تھا کہ ذیابطیس ایک خاموش قاتل ہے،ذیابطیس کے ایسے مریض جن کے پیروں میں زخم ہوجاتے ہیں وہ پہلے تین سے چار ہفتے دیسی ٹوٹکوں کے چکر میں اپنے پیروں اور ٹانگوں سے محروم ہوجاتے ہیں،شوگر کے مریضوں اپنے پیروں کا روزانہ معائنہ کرنا چاہیے اور کسی بھی زخم یا غیر معمولی تبدیلی کی صورت میں ڈائیبیٹک فُٹ کلینک یا ماہرین سے رجوع کرنا چاہیے۔

Comments are closed.