طالبان حملے بند ہونے پرصدر ٹرمپ کا امن مذاکرات ختم کرنے کا اعلان

واشنگٹن: امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے افغانستان میں حملے بند نہ کرنے پر افغان طالبان سے امن مذاکرات ختم کرنے کا اعلان کر دیا،جب کہ طالبان رہنماؤں سے خفیہ ملاقات بھی منسوخ کر دی۔

سماجی رابطوں کی ویب سائٹ پر جاری ایک بیان میں امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا ہے کہ مذاکرات کے اہم مرحلے پر کابل پرحملہ کیا گیا، اگر طالبان جنگ بندی پرمتفق نہیں ہوسکتے تو انہیں مذاکرات کا بھی حق نہیں۔ طالبان وفد نے آج ملاقات کے لیے امریکا پہنچنا تھا۔

صدر ٹرمپ نے افغان طالبان سے امن مذاکرات منسوخ کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کیمپ ڈیوڈ میں افغان طالبان سے خفیہ ملاقاتیں بھی منسوخ کر دیں۔ اپنی ٹویٹ میں انہوں نے لکھا کہ افغان حملےمیں 11افراد کے ساتھ ایک امریکی فوجی بھی مارا گیا، افغان طالبان نے کابل حملے کی ذمہ داری قبول کی۔ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے مزید لکھا کہ ”افغان طالبان کتنی دہائیوں تک جنگ لڑنا چاہتے ہیں”۔

صدر ٹرمپ کا کہنا ہے کہ یہ کیسے لوگ ہیں جو اپنی سودے بازی کی پوزیشن کو مضبوط کرنے کے لیے لوگوں کو قتل کرتے ہیں۔

Comments are closed.