فضل الرحمان کے صاحبزادے مولانا اسد نے علی امین گنڈا پور کا الیکشن کا چیلنج قبول کر لیا

اسلام آباد: وفاقی وزیر برائے امور کشمیر و گلگت بلتستان علی امین گنڈا پور نے قومی اسمبلی کے اجلاس میں مولانا فضل الرحمان کو ایک بار پھر الیکشن کا چیلنج دیا جسے ان کے صاحبزادے نے قبول کر لیا۔

قومی اسمبلی کے ہنگامہ خیز اجلاس میں ایک بار پھر اس وقت گرما گرمی دیکھنے میں آئی جب وفاقی وزیر برائے امور کشمیر و گلگت بلتستان علی امین گنڈا پور نے جمعیت علمائے اسلام (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمان کو الیکشن کا چیلنج دیا۔ان کا کہنا تھا کہ مولانا فضل الرحمان کو عوام نے مسترد کر دیا، وہ کیمرے لگوا کر دوبارہ الیکشن کرا لیں۔

اس موقع پر مولانا فضل الرحمان کے صاحبزادے مولانا اسد نے پی ٹی آئی رہنما کا چیلنج قبول کرتے ہوئے کہا کہ علی امین گنڈا پور اسمبلی رکنیت سے استعفیٰ دیں میں بھی استعفیٰ دیتا ہوں، استعفے دے کر عوام میں جائیں گے تو دودھ کا دودھ اور پانی کا پانی ہو جائے گا۔

Comments are closed.