پی سی بی چیف نے شرجیل کی ٹیم میں واپسی پر تنقید کرنیوالے حفیظ کی کلاس لےلی

لاہور: پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیف ایگزیکٹو وسیم خان نے سپاٹ فکسنگ کے بعد سزا پوری کرنے والے شرجیل خان کی قومی ٹیم میں واپسی سے متعلق بیان پر محمد حفیظ کی کلاس لے لی، پی سی بی چیف نے کرکٹر کو کہا ہے کہ صحیح یا غلط پر رائے دینے کی بجائے اپنے کھیل پر توجہ دو۔

ٹیلی کانفرنس میں صحافیوں کے ساتھ گفتگو میں وسیم خان نے کہا کہ بورڈ کو صحیح یا غلط کا بتانا کسی کھلاڑی کا کام نہیں، دیگر ملکوں میں کرکٹر ایسا نہیں کرتے، محمد حفیظ کو بھی اپنی توجہ کھیل پر مرکوز رکھنا چاہیے۔

واضح رہے کہ آل راؤنڈر محمد حفیظ نے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ پر نام لیے بغیرشرجیل خان کی قومی ٹیم میں واپسی کی مخالفت کرتے ہوئے کہا تھا کہ ٹیلنٹ اور فٹنس نہیں بلکہ دیانتداری اور عزت نفس پہلا معیار ہونا چاہیے۔

ٹیلی کانفرنس میں وسیم خان نے کہا کہ شرجیل خان اسپاٹ  فکسنگ کیس میں اپنی سزا پوری کر چکے لہذا ان کی سلیکشن میں کوئی رکاوٹ نہیں، کراچی کنگزنے انھیں پی ایس ایل کے لیے منتخب بھی کیا،البتہ قومی ٹیم میں شامل کرنے کا فیصلہ سلیکٹرز کو کرنا ہے، پی ایس ایل میں شرجیل خان فٹ نظر نہیں آئے، ہیڈکوچ و چیف سلیکٹر مصباح الحق اور باولنگ کوچ وقار یونس کا بیان بھی سامنے آیا ہے۔

پاکستان بورڈ کے چیف ایگزیکٹو آفیسر نے کہا کہ پی سی بی نے فٹنس کے حوالے سے سخت معیار وضع کر رکھا ہے، اوپنر کے پاس ابھی چند ماہ باقی ہیں، انھیں سخت محنت کرتے ہوئے ثابت کرنا ہوگا کہ وہ قومی ٹیم میں واپسی کا جذبہ اور چیلنج کو قبول کرنے کی صلاحیت رکھتے ہیں، سلیکٹرز اس بات پر نظر رکھیں گے کہ وہ اس دوران کتنی بہتری لانے میں کامیاب ہوتے ہیں۔

Comments are closed.