سعودی عرب کی حج معاہدے نہ کرنے کی ہدایت، پاکستان نے حج آپریشن پرکام روک دیا

اسلام آباد: عالمی وباء کورونا کی بگڑتی صورتحال کے پیش نظر سعودی عرب کی جانب سے حج معاہدے نہ کرنے کی ہدایت پر پاکستان نے حج آپریشن 2020 پر کام روک دیا۔

پاکستان کی وزارت مذہبی امور کو سعودی عرب کے وزیر حج کی طرف سے مراسلہ موصول ہوا ہے جس کے مطابق سعودی عرب نے حکومت پاکستان کو حجاج کیلئے رہائش اور ٹرانسپورٹ فراہمی سے متعلق معاہدے کرنے سے روک دیا گیا اور موقف اپنایا گیا ہے کہ فی الحال یہ معلوم نہیں کہ حج 2020 کا آپریشن مکمل ہوگا یا نہیں، لہٰذا پاکستان نے جن کمپنیوں سے معاہدے کرنے ہیں وہ نہ کیے جائیں۔

سعودی وزیر برائے امور حج کی جانب سے بھجوائے گئے مراسلے میں کہا گیا ہے کہ سعودی حکومت کورونا وائرس کی عالمی صورت حال پر نظر رکھے ہوئے ہے، حالات بہتر ہوتے ہی حج آپریشن 2020 کے معاملے پر مزید آگاہ کیا جائے گا۔

وزارت مذہبی امور نے سعودی اطلاع کے بعد اپنا حج آپریشن پر کام روک دیا ہے۔ سعودی حکومت نے پاکستان کے ساتھ ساتھ ان تمام ممالک کو یہ ہدایات جاری کی ہیں جہاں کے ایک لاکھ سے زائد عازمین حج کے لیے حجاز مقدس کا سفر کرتے ہیں۔

کورونا وائرس کی وجہ سے دنیا کے دیگر ممالک کی طرح سعودی عرب میں بھی لاک ڈاؤن ہے، عالمی وباء سے متاثرہ افراد کی تعداد میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے، جس کے نتیجے میں حج 2020 متاثر ہونے کا خدشہ پیدا ہوگیا ہے۔

Comments are closed.