آئی سی آر سی نے کورونا بچاؤ کیلئے کٹس خیبرپختونخواہ کے 4اسپتالوں کو فراہم کر دیں

اسلام آباد: انٹرنیشنل کمیٹی آف دی ریڈ کراس (آئی سی آر سی) کی طرف سے کورونا وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کیلئے خیبرپختونخوا اور سابقہ فاٹا کے ضم شدہ علاقوں کے سرکاری ہسپتالوں کو معاونت فراہم کی گئی ہے۔

آئی سی آرسی نے پشاور کے سب سے بڑے سرکاری اسپتال لیڈی ریڈنگ، ڈی ایچ کیو باجوڑ، تحصیل ہیڈ کوارٹر اسپتال جمرود اور ڈسٹرکٹ  یاچ کیو پاڑا چنار کے لئے ڈاکٹرز، پیرا میڈیکل سٹاف اور عملے کی ذاتی حفاظت کی اشیاء، جراثیم کش محلول اور غیر ضروری اشیاء تلف کرنے میں مدد دینے والا سامان فراہم کر دیا ہے۔

اعلامیے کے مطابق بین الاقوامی ریڈ کراس (آئی سی آر سی)، کی جانب سے خیبر پختونخواہ کے چار اسپتالوں کو فراہم کی گئی اشیاء ریڈ کراس کی جانب سے فراہم کی جانے والی امداد کا پہلا فیز مکمل ہو گیا ہے جس میں  طبی عملے کے لیے 11 ہزار سرجیکل ماسک،2 ہزار این 95 ماسک، 1 ہزار آنکھوں اور چہرے کے بچاو کے آلات، 3 ہزار گاون، 1 سو 75 کلو گرام کلورین،50 ہزار دستانوں کے جوڑے، طبی آلات اور روزمرہ کی استعمال کی دیگر اشیاء تقسیم کی گئیں۔ 100 سے زائد ہیوی ڈیوٹی بوٹ اور دستانوں کے جوڑے بھی معاون عملے کو فراہم کیے گئے۔

اسی طرح جراثیم کے پھیلاو کو روکنے میں معاون ثابت ہونے والی اشیاء جیسا کہ سینیٹائزر، صابن، غیر ضروری اشیا کو ٹھکانے لگانے والے آلات اور حفظانِ صحت کی دیگر ضروریات بھی پہنچائی گئیں۔ حفاظتی آلات و ضروریات کی تقسیم کا پہلا مرحلہ بخوبی انجام پاچکا ہے اور دوسرے مرحلے کی تیاری جاری ہے۔

آئی سی آر سی شعبہ صحت کی نگران ڈاکٹر زہرہ محمدی نے اس موقع پر کہا، تیکنیکی اشیاء و ضروریات کی فراہمی کے علاوہ ہم طبی عملے اور عام لوگوں تک ایسی ضروری معلومات بھی پہنچا رہے ہیں جو کووِڈ۔۱۹ کے پھیلاو کو روکنے میں مفید ثابت ہوسکتی ہیں۔ اس کے ساتھ ہی ہمیں اس طبی عملے کے لیے اپنا تعاون اور ہمدردی پیش کرنے کی ضرورت ہے جسے اس وقت نسبتا زیادہ خطرے کا سامنا ہے اور ممکن ہے کہ وہ اپنے اہلِ خانہ سے رابطہ بھی نہ کر پارہے ہوں۔

آئی سی آرسی کے ذمہ داران کے پی کے ضم شدہ علاقوں میں ہاتھ دھونے والے سٹیشنز اور ٹریاج سسٹم کے قیام کے ساتھ ساتھ خیموں کی فراہمی، طبی عملے کو اشیائے خور ونوش کی فراہمی اور جراثیم کش محلول کی فراہمی پر بھی غور کررہے ہیں۔ مختلف زبانوں میں کورونا وائرس سے بچاو کے لیے ہدایات پر مبنی پوسٹرز بھی آویزاں کیے جائیں گے۔

واضح رہے کہ آئی سی آر سی جراثیم کے پھیلاو کو روکنے اور ان پر قابو پانے کے لیے ہسپتال کی انتظامیہ اور اہل کاروں کو مشاورتی معاونت فراہم کررہی ہے، جس کے لئے اپنے موجودہ پروگراموں کو بھی اس صورتِ حال کے مطابق ڈھال لیا ہے۔ فلاحِ انسانیت کی یہ تنظیم ٹریاج کے استعدادِ کار کو بہتر بنانے، اسپتالوں میں آئسولیشن اور اسکریننگ کے حالات اور کچرے کو ٹھکانے لگانے کے انتظام کے لئے تکنیکی رہنمائی بھی فراہم کررہی ہے۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.