تحریک انصاف آزاد کشمیر کو مقبوضہ کشمیر کے عوام کے لیے ماڈل بنائے گی، احمد جواد

اسلام آباد: پاکستان تحریک انصاف کے مرکزی سیکرٹری اطلاعات احمد جواد کا کہنا ہے کہ آزاد کشمیر میں ستر برسوں میں جو بھی حکومتیں رہیں ان کی ترجیح شہریوں کی فلاح وبہبود سے زیادہ ذاتی مفادات اور خاندانوں کی سیاسی بالادستی رہی ہے۔

پی ٹی آئی کے مرکزی سیکرٹری اطلاعات احمد جواد نے اسلام آباد میں تحریک انصاف آزاد کشمیر کے شعبہ اطلاعات اور سوشل میڈیا کے اشتراک سے منعقد ہونے والی ایک ورکشاپ سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پی ٹی آئی برسراقتدار آکر مالی وسائل کا رخ عوام کی صحت اور تعلیم کی طرف موڑے گی اورآزادکشمیر کو مقبوضہ کشمیر کے عوام کے لیے ایک پرکشش ماڈل بناکر پیش کرے گی۔

 انہوں نے آزادکشمیر کے سیکرٹری اطلاعات ارشاد محمود اور سوشل میڈیا ٹیم کے سربراہ نعمان خان کی پارٹی کے اطلاعات کے شعبہ کو منظم کرنے کی کوششوں کی تعریف کرتے ہوئے یقین دلایا کہ حکومت پاکستان اور مرکزی پارٹی آزادکشمیر کے الیکشن اور الیکشن کے بعد حکومت سازی کے عمل میں ان کا بھرپور ساتھ دے گی۔

Activity - Insert animated GIF to HTML

احمد جواد نے کہا کہ تحریک انصاف کی حکومت آزاد کشمیر میں جدید تعمیر و ترقی کے لیے ایک وثرن رکھتی ہے تحریک انصاف یہ سمجھتی ہے کہ آزاد کشمیرآسانی سے ایک ماڈل سٹیٹ بن سکتی ہے اگر ہم ٹورازم اور انڈسٹری کو فروغ دیں تو آزاد کشمیر کو سنگاپور اور مالدیپ جیسی سٹیٹ بننے سے کوئی نہیں روک سکتا۔

تحریک انصاف آزادکشمیر کے سیکرٹری اطلاعات ارشاد محمود نے کہا کہ پارٹی میں سیاسی تربیت کا سلسلہ شروع کیا گیا ہے تاکہ کارکنوں اور عہدے داران کو سینئر لیڈرشپ اور مختلف شعبہ زندگی سے تعلق رکھنے والے ماہرین کے تجربات سے استفادہ کا موقع مل سکے۔ انہوں نے کہا کہ آزادکشمیر کے عوام روایتی سیاستدانوں سے تنگ آچک ہیں اور وہ اگلے سال ہونے والے الیکشن میں تحریک انصاف کو کامیاب کرائیں گے۔

اس ایک سال میں تحریک انصاف انقلابی منشور عوام کے سامنے پیش کرے گی تاکہ خطے کو تعمیر وترقی کی معراج پر پہنچایاجاسکے۔ اسلام آباد کے نجی ہوٹل میں میں منعقدہ اس ٹریننگ ورکشاپ میں آزاد کشمیر بھر سے انفارمیشن سیکرٹریز اور سوشل میڈیا کے عہدے داران نے پی ٹی آئی کی لیڈرشپ کے علاوہ سینئیر اینکر پرسن احمد قریشی، ایڈیشنل سیکرٹری جنرل سیکرٹری راجہ منصور خان اور سوشل ایکٹیوسٹ ملیحہ ہاشمی کے خیالات اور تجربات سے استفادہ کیا۔

ٹریننگ ورکشاپ کے دوسرے سیشن سے خطاب کرتے ہوئے سینئیر اینکر پرسن احمد قریشی نے کہا کہ مسئلہ کشمیر کو تمام انٹرنیشنل فورمز پہ اٹھانا ضروری ہے۔ وزیراعظم عمران خان نے کشمیر کے لیے جو کام کیا ہے اس میں مزید تیری لانے کی ضرورت ہے کیونکہ کشمیر میں انسانی حقوق کی سنگیں خلاف ورزیاں ہورہی ہیں۔ انہوں نے پی ٹی آئی کے عہدے داران کو مشورہ دیا کہ وہ ٹکراؤ کے بجائے مکالمے کا راستہ اختیار کریں کیونکہ وہ حکمران جماعت ہیں۔

 تنظیمی سٹرکچر پر بات کرتے ہوئے راجہ منصور خان کا کہنا تھا کہ تمام انفارمیشن سیکرٹریز بجائے شخصیات کے پارٹی کے نظریے کو پروموٹ کریں آپ کا بیانیہ پارٹی کے منشور اور سیاسی فکر کے گرد گھومتا  ہوا محسوس ہونا چاہیے۔ انہوں نے بتایا کہ آزادکشمیر میں پارٹی کی تنظیم سازی کا عمل آخری مراحل میں ہے۔ اب پارٹی پوری قوت سے الیکشن مہم میں اترے گی۔

تیسرے سشن سے خطاب کرتے ہوئے سوشل ایکٹیوسٹ ملیحہ ہاشمی کا کہنا تھا کہ ہمارے ہاں سوشل میڈیا پہ مخالفین کو بلاضرورت اہمیت دی جاتی ہے۔ ہمیں زیادہ  توجہ اپنا نقطہ نظر اور سیاسی نظریئے کے فروغ  پہ دینی چاہیے۔انہوں نے پی ٹی آئی کو مشورہ دیا کہ مخالفین کے ساتھ ٹکراؤ کے بجائے اپنے سیاسی اور تنظیمی کام پر توجہ رکھیں۔

صدر تحریک انصاف آزاد کشمیر بیرسٹر سلطان محمود چوہدری نے تقریب کے آخر میں عنصرصارم مرکزی ڈپٹی سیکرٹری اطلاعات، عمبرین ترک سیکرٹری اطلاعات خواتین ونگ آزاد کشمیر، سید کمال حیدرشاہ میڈیا ایڈوائزر سابق وزیر اعظم آزاد کشمیربیرسٹرسلطان محمودچوہدری ،اخلاق رانا سیکرٹری اطلاعات نیلم، سردار مبین خادم سیکرٹری اطلاعات سندھنوتی، سردار عثمان ضیاءسیکرٹری اطلاعات ضلع پونچھ، ریاض گیلانی سیکر ٹری اطلاعات باغ ، ملک وقاص سیکر ٹری اطلاعات ضلع کوٹلی، عدنان بیزادسیکرٹری اطلاعات ضلع میرپور،حسنین چغتائی سیکرٹری اطلاعات میرپور شہر، راجاابرار، سوشل میڈیا ٹیم کے سربراہ نعمان خان، سید مبشر گردیزی ، احسن خورشید،چوہدری غلام حنیف، چوہدری سفیر، ارباز احمد اعجاز رفیق، اسرار احمد، شگفتہ کیانی ، صبا لاریب، مدیحہ زمان، آنایہ فضیل اورارسلان حسین کو سرٹیفیکیٹ دیئے۔

Comments are closed.